You are here: فلسطین اسرائیلی فوج اور فلسطینیوں میں جھڑپیں، ایک نوجوان شہید
 
 

اسرائیلی فوج اور فلسطینیوں میں جھڑپیں، ایک نوجوان شہید

E-mail Print PDF

0Pala7430کفر قاسم - (فلسطین نیوز۔مرکز اطلاعات) فلسطین کے مقبوضہ شہر کفر قاسم میں اسرائیلی فوج اور فلسطینی مظاہرین کے درمیان تصادم کے نتیجے میں ایک فلسطینی نوجوان شہید اور درجنوں زخمی ہوگئے۔

فلسطین نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق گذشتہ روز اسرائیلی فوج اور فلسطینی شہریوں کے درمیان کفر قاسم میں تصادم اس وقت ہوا جب صہیونی فوج نے فلسطینیوں کے خلاف وحشیانہ کریک ڈاؤن شروع کیا۔ اس پر فلسطینی شہری احتجاج کرتے ہوئے سڑکوں پر نکل آئے۔

اسرائیلی فوج نے مظاہرین کو منتشر کرنے کےلیے ان پر لاٹھی چارج کیا، گولیاں چلائیں اور آنسوگیس کی شیلنگ کی۔

گولیاں لگنے سے ایک فلسطینی نوجوان شدید زخمی ہوا جسے علاج کے لیے بیلنسن اسپتال منتقل کیا گیا جہاں کچھ ہی دیر بعد وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔

اس دوران نامعلوم افراد نے اسرائیلی پولیس کی ایک گاڑی کو آگ لگا دی جس کے نتیجے میں گاڑی جل کر خاکستر ہوگئی۔ تین دوسری گاڑیوں کو بھی آگ لگانے کی اطلاعات ملی ہیں۔

اسرائیلی پولیس کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ تصادم اس وقت ہوا جب کفر قاسم میں ایک گشتی پارٹی پر فلسطینی نوجوانوں نے سنگ باری کی۔ پولیس نے جوابی کارروائی کے طور پرفلسطینیوں پر آنسوگیس کی شیلنگ اور ربڑ کی گولیوں کا استعمال کیا جس کے نتیجے میں متعدد فلسطینی زخمی ہوئے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ فلسطینیوں کی سنگ باری سے ایک پولیس اہلکاربھی زخمی ہوا ہے جب کہ کفر قاسم کے مقامی کئی شہری زخمی ہوگئے۔