You are here: Home
 
 

اسرائیلی طیاروں کی دراندازی لبنان کی خود مختاری پر حملہ قرار: لبنانی صدر

E-mail Print PDF

0Pala10696بیروت (فلسطین نیوز۔مرکز اطلاعات) لبنان کے صدر میشل عون نے اسرائیلی فوج کے جنگی طیاروں کی جانب سے لبنان کی فضائی حدود کی خلاف ورزی کی شدید مذمت کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ اسرائیلی جنگی طیاروں کا لبنان کی فضائی حدود کو استعمال کرنا لبنان کی خود مختاری پر حملہ ہے اور ہم آئندہ ایسی حرکت کی اجازت نہیں دیں گے۔

فلسطین نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق کابینہ کے اجلاس سے خطاب میں انہوں نے کہا کہ اسرائیل کی طرف سے کسی بھی عرب ملک کی فضائی، بری یا بحری حدود کی خلاف ورزی کی گئی تو ہم اس کی شدید مذمت کریں گے۔

صدر عون نے کہا کہ وہ لبنان کی خود مختاری کو پامال کرنے پر اسرائیل کے خلاف سلامتی کونسل میں شکایت کریں گے۔

خیال رہے کہ  گذشتہ اتوار کو لبنانی فوج نے دعویٰ کیا تھا کہ اسرائیل کے چار جنگی طیارے بحر احمر کے اوپر سے گذرتے ہوئے شمالی شہر جونیہ سے گذر کر مشرق میں بعبلک تک گئے اور وہاں سے واپس اسرائیل واپس ہوگئے۔

ادھر سوموار کو شامی رجیم کی طرف سے کہا گیا کہ اسرائیلی جنگی طیاروں نےحمص کے قریب اس کے ٹی فور ہوائی اڈے پر میزائل داغے۔

ادھر لبنانی وزیراعظم سعد حریری نے کہا ہے کہ اس وقت پورا مشرق وسطیٰ کشیدگی کی لپیٹ میں ہے اور لبنان موجودہ حالات میں غیر جانب دار رہے گا۔