You are here: Home
 
 

صیہونی وزیر نفتالی بینٹ کی غزہ میں فلسطینی مظاہرین کو قتل کرنے کی دھمکی

E-mail Print PDF

0Pala112146مقبوضہ بیت المقدس (فلسطین نیوز۔مرکز اطلاعات) اسرائیلی حکومت کے ایک سرکردہ وزیر نے غزہ کی پٹی کی سرحد پر احتجاج کرنے والے فلسطینیوں کو قتل کرنے کی دھمکی دی ہے۔ اسرائیلی وزیر تعلیم نفتالی بینٹ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ غزہ کی پٹی سے سنہ 1948ء کے مقبوضہ علاقوں میں داخل ہونے والے زندہ نہیں بچ سکیں۔ انہوں نے اسرائیلی فوج پر زور دیا کہ وہ غزہ کی سرحد پار کرنے کی کوشش کرنے والے ہر فلسطینی کو گولی مار کر قتل کردیں۔

فلسطین نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق عبرانی اخبار "معاریو"  کی رپورٹ میں بتایا ہے کہ وزیر تعلیم کا کہناہے کہ غزہ کی سرحد پار کرنے والا کوئی فلسطینی زندہ نہیں بچے گا۔

نفتالی بینٹ کا کہنا تھا کہ حکومت غزہ کے مظاہرین سے نمٹنے کے جو طریقے اختیار کررہی ہے وہ مؤثر ثابت نہیں ‌ہوئے۔ غزہ کو تیل کی سپلائی بند کرنا، ماہی گیروں کے لیے سمندر میں شکار گاہ کا دائرہ محدود کرنا یا غزہ پر نئی پابندیاں عائد کرنا مسئلے کا حل نہیں۔ فوج کو چاہیے کہ وہ غزہ کی سرحد پر جمع ہونے والے فلسطینیوں پر گولیاں چلائے۔